آن لائن دنیا کے اسمارٹ، پُر اعتماد دریافت کنندگان بننے میں بچوں کی مدد کرنا

بچوں کو آن لائن بہتر فیصلے کرنے کی تعلیم دینے کیلئے، ہم نے Connect Safely اور Family Online Safety Institute سے منظور شدہ وسائل تیار کیے ہیں تاکہ ہوشیار، باخبر، ڈیجیٹل شہری بننے میں ان کی مدد کی جا سکے۔

ان تجاویز اور وسائل کی مدد سے آن لائن چیزوں کا دانشمندانہ انتخاب کریں

  • Be Internet Awesome کے ساتھ اسمارٹ ڈیجیٹل شہری بننے میں بچوں کی مدد کریں

    انٹرنیٹ سے زیادہ سے زیادہ فائدہ اٹھانے کیلئے معلومات پر مبنی فیصلے کرنے کی خاطر بچوں کو تیار کرنے کی ضرورت ہے۔ یہ پروگرام بچوں کو ڈیجیٹل شہریت اور حفاظت کے مبادیات سکھاتا ہے تاکہ وہ اعتماد کے ساتھ آن لائن دنیا کو دریافت کر سکیں۔ Interland، جو ایسا آن لائن ایڈونچر ہے جو چار چیلنجنگ گیمز کے ذریعے ڈیجیٹل حفاظت کے کلیدی اسباق کو عملی مشق کے طور پر پیش کرتا ہے، کے ساتھ بچے اپنے طریقے سے کھیلتے ہوئے انٹرنیٹ کے ماہر بن سکتے ہیں۔

    ابھی تک، مزید مارکیٹس میں توسیع جاری رکھنے کے منصوبوں کے ساتھ ہم نے اس پروگرام کو ریاستہائے متحدہ اور لاطینی امریکہ میں شروع کیا ہے۔ آن لائن اسمارٹ اور محفوظ بننے کا طریقہ جاننے میں نو عمروں کی مدد کرنے کیلئے، ہم Online Safety Roadshow کے حصہ کے بطور ریاستہائے متحدہ کے اسکولوں میں براہ راست یہ نصاب لے کر آئے ہیں۔

Be Internet Smart احتیاط سے اشتراک کریں

اچھی (اور بری) خبریں آن لائن تیزی سے پھیلتی ہیں اور بغیر کسی دور اندیشی کے، بچے اور نو عمر افراد ایسی چکمہ دینے والی صورتحال میں پھنس سکتے ہیں جن کے دیرپا نتائج ہوتے ہیں۔ صحیح لوگوں کے ساتھ مناسب طریقے سے اشتراک کرنے کا طریقہ جاننے کے لیے ہم نے ان کے لیے تجاویز تیار کی ہیں۔

  • ان کے ڈیجیٹل فٹ پرنٹ کے بارے میں انہیں سکھائیں

    اپنے بچوں کے ساتھ، اپنے لیے یا ان کے پسندیدہ موسیقار کو آن لائن تلاش کریں اور اپنی تلاش کردہ چیز کے بارے میں بات کریں۔ ہو سکتا ہے کہ آپ پیشگی نتائج چیک کرنا چاہیں۔ اس بارے میں بات کریں کہ دوسرے لوگ ان نتائج سے آپ کے بارے میں کیا جان سکتے ہیں اور آپ آن لائن ڈیجیٹل فٹ پرنٹ کو کیسے فروغ دیتے ہیں۔

  • سوشل موازنہ کو کم از کم کرنے میں مدد کریں

    یقینی بنائیں کہ آپ کے بچے کو اس بات کا علم ہے کہ دوست آن لائن جس چیز کا اشتراک کرتے ہیں وہ مکمل کہانی کا محض ایک حصہ ہوتا ہے، اور یہ عام طور پر ہائی لائٹس ہوتی ہیں۔ انہیں یاد دلائیں کہ تمام لوگوں کی زندگی میں بیزار کن، غمگین یا شرمندہ کن لمحات بھی آتے ہیں جن کا وہ اشتراک نہیں کرتے۔

  • اشتراک کی جانے والی چیزوں کے بارے میں فیملی کے اصول بنائیں

    آن لائن اشتراک نہ کی جانے والی چیزوں کے بارے میں اپنی فیملی کیلئے واضح توقعات سیٹ کریں، جیسے تصاویر یا نجی معلومات۔ ایک ساتھ چند تصاویر لینے کی مشق کریں اور اس بارے میں بات کریں کہ ذمہ دار اشتراک کیسا لگتا ہے۔ مثلاً، اپنے بچے کی اس بات پر حوصلہ افزائی کریں کہ وہ اپنی ہی نہیں بلکہ دوسروں کی بھی تصاویر کا اشتراک کرنے سے پہلے سوچے۔ اسے یاد دلائیں کہ اگر اسے یقین نہیں ہے تو وہ اجازت طلب کرے۔

  • حد سے زیادہ اشتراک کرنے کے بارے میں انہیں سکھائیں

    حد سے زیادہ اشتراک کر دینے کے حوالے سے سوچ بچار پر مبنی حل، جیسے اشتراک کردہ چیز مٹا دینا یا رازداری کی ترتیبات ٹھیک کرنا۔ ایسا ہونے پر چیزوں کا موازنہ کرنے کی کوشش کریں۔ کچھ شرمناک لمحے سنجیدہ ہوتے ہیں، لیکن دیگر صرف اچھے سیکھنے کے لمحات ہوتے ہیں۔

Be Internet Alert جعلسازی کے شکار نہ ہوں

اس بات سے باخبر ہونے میں اپنے بچوں کی مدد کرنا اہم ہے کہ آن لائن لوگ اور حالات ہمیشہ ویسے نہیں ہوتے جیسے وہ لگتے ہیں۔ ہم نے اس بارے میں مفید رہنمائی کو فروغ دیا ہے کہ کیسے آپ اصلی اور فرضی چیزوں کے درمیان امتیاز کرنے میں ان کی مدد کر سکتے ہیں۔

  • شخصیت گیری کی وضاحت کریں

    انہیں یہ بتائیں کہ کیوں کسی شخص کی ان کے پاس ورڈز یا نجی ڈيٹا کو حاصل کرنے میں دلچسپی ہو سکتی ہے۔ اس معلومات کے ساتھ، کوئی شخص ان کا اکاؤنٹ استعمال کر سکتا ہے اور ان کا بھیس اختیار کر سکتا ہے۔

  • فریب دہی کی کوششوں کا پتا لگانے میں ان کی مدد کریں

    ممکن ہے کہ آپ کے بچوں کو یہ احساس نہ ہو پائے کہ لوگ ان کی ذاتی معلومات حاصل کرنے کیلئے انہیں جھانسا دینے کی کوشش کر سکتے ہیں۔ انہیں سکھائیں کہ اگر انہیں کسی اجنبی سے پیغام، لنک، یا ای میل موصول ہوتی ہے، ان سے اکاؤنٹ کی معلومات طلب کی جاتی ہے یا اس میں عجیب نظر آنے والی منسلکہ ہوتی ہے تو وہ آپ سے رابطہ کریں۔

  • انہیں فریب کاریوں کی شناخت کرنا سکھائیں

    اپنے بچوں کو بتائیں کہ کچھ جھانسا دینے والی فریب کاریاں ایسی دکھائی دیتی ہیں جیسے وہ کسی دوست کے پاس سے آ رہی ہوں۔ ذی ہوش بالغان بھی دھوکہ کھا جاتے ہیں! اگر کوئی پیغام ٹھیک نہ لگے تو انہیں آپ کو بتانے دیں۔ ان کی تشویشات کا ازالہ کرنے سے اعتماد قائم کرنے میں مدد ملتی ہے۔

  • ایک ساتھ سیکیورٹی کے سراغ تلاش کریں

    ایک ساتھ کوئی ویب سائٹ ملاحظہ کریں اور سیکیورٹی کی علامات تلاش کریں۔ کیا URL کے آگے پیڈلاک موجود ہے یا یہ https سے شروع ہوتا ہے، جس کا مطلب ہوتا ہے کہ یہ محفوظ ہے؟ کیا URL سائٹ کے نام سے مماثل ہے؟ ان علامات کی طرف اشارہ کرنے میں مدد کریں جنہیں کوئی سائٹ ملاحظہ کرتے وقت انہیں دیکھنا چاہیے۔

Be Internet Strong اپنے رازوں کو محفوظ کریں

ذاتی رازداری اور سیکیورٹی آن لائن اتنی ہی اہم ہیں جتنی وہ آف لائن ہوتی ہیں۔ آپ کے بچوں کے لیے اپنی قیمتی معلومات کی نگہبانی کا طریقہ سمجھنا اہم ہے تاکہ وہ اپنے آلات، ساکھ اور تعلقات کو نقصان سے بچا سکیں۔

  • ایسے پاس ورڈز بنائیں جن کا پتا لگا پانا مشکل ہو

    انہیں یادگار عبارت کو مضبوط پاس ورڈ میں تبدیل کرنے کا طریقہ سکھائیں۔ کم از کم آٹھ ملے جلے حروف کا استعمال کریں اور کچھ کو علامات اور نمبرز میں تبدیل کریں۔ مثلاً "میری چھوٹی بہن کا نام انم ہے" جو my$n!A ہو جاتا ہے۔ یہ سمجھنے میں ان کی مدد کریں کہ کس وجہ سے پاس ورڈ کمزور ہوتا ہے، جیسے خود اپنا پتہ، یوم پیدائش، 123456 یا ایسا "پاس ورڈ" استعمال کرنا جس کا اندازہ لگانا آسان ہوتا ہے۔

  • ان کی نجی معلومات کو نجی رکھیں

    اس بارے میں بات کریں کہ کون سی معلومات انہیں نجی رکھنی چاہیے – جیسے ان کے گھر کا پتہ، پاس ورڈز یا وہ اسکول جہاں وہ جاتے ہیں۔ ان کی حوصلہ افزائی کریں کہ اگر ان سے اس طرح کی معلومات طلب کی جاتی ہے تو وہ آپ کے پاس آئیں۔

  • پاس ورڈ کی اچھی طرح حفاظت کرنا سکھائیں

    انہیں سکھائیں کہ کہیں بھی اپنا پاس ورڈ درج کرنے سے پہلے دو بار سوچیں اور یہ جاننے کیلئے کہ آیا یہ صحیح ایپ یا سائٹ ہے دو بار چیک کریں۔ شبہ ہونے پر، کسی جگہ داخل ہونے سے پہلے انہیں آپ سے بات کرنی چاہیے۔ اس کے علاوہ، مختلف ایپس اور سائٹس کیلئے مختلف پاس ورڈز رکھنے کیلئے ان کی حوصلہ افزائی کریں۔ وہ ایک بنیادی پاس ورڈ رکھ کر اس میں ہر ایک ایپ کیلئے چند حروف شامل کر سکتے ہیں۔

  • مذاق سے بچنے میں ان کی مدد کریں

    انہیں یاد دلائیں کہ وہ اپنے پاس ورڈز کو نجی رکھ کر دوسروں کو جعلی یا شرمندہ کرنے والے پیغامات بھیجنے کیلئے اپنے اکاؤنٹس تک رسائی حاصل کرنے سے روکنے میں مدد کر سکتے ہیں۔

Be Internet Kind رحم دل بننا اچھا ہے

انٹرنیٹ ایک مضبوط ایمپلی فائر ہے جس کا استعمال مثبت یا منفی باتیں پھیلانے کے لیے ہو سکتا ہے۔ اپنے بچوں کے آن لائن اعمال میں ”دوسروں کے ساتھ ویسا ہی برتاؤ کریں جیسا برتاؤ آپ اپنے ساتھ چاہتے ہیں“ تصور کو لاگو کر کے، دوسروں کیلئے مثبت تاثر پیدا کر کے اور دھمکانے کے برتاؤ کو کمزور کر کے اعلی اخلاق کو اپنانے میں ان کی مدد کریں۔

  • آن لائن دھمکانے کے بارے میں ڈائیلاگ بنائیں

    آن لائن ہراساں کرنے یا ان اوقات کے بارے میں بات کریں جب لوگ دوسروں کو جان بوجھ کر تکلیف پہنچانے کیلئے آن لائن ٹولز کا استعمال کرتے ہیں۔ منصوبہ بنائیں کہ اگر آپ کے بچے یہ دیکھتے یا اس کا شکار ہوتے ہیں تو وہ کس سے رابطہ کر سکتے ہیں۔ پوچھیں کہ آیا انہیں یا ان کے دوستوں کو آن لائن ذلت کا تجربہ ہوا ہے۔ کچھ سوالات جو آپ پوچھ سکتے ہیں وہ یہ ہیں: یہ کس شکل میں پیش آئی؟ یہ کیسا لگا؟ کیا آپ نے سوچا کہ ذلت والے تبصرے کے بارے میں شاید کسی کو بتا کر اسے روکنے میں مدد کرنے کی طاقت آپ کے پاس ہے؟

  • آن لائن اپنی فیملی کی اقدار قائم کریں

    اس بارے میں واضح رہیں کہ آپ آن لائن ان سے کیسے عمل کی توقع کرتے ہیں۔ انہیں اس بات سے سکھانا شروع کرنا زبردست رہے گا کہ دوسروں کے ساتھ ویسا ہی برتاؤ کرنا ہے جیسا برتاؤ وہ چاہتے ہیں اور آن لائن صرف وہی باتیں کہنی ہیں جو وہ روبرو کہ سکتے ہیں۔

  • کسی شخص کے الفاظ کے مطلب کے بارے میں بات کریں اور مثبت رویہ کی حوصلہ افزائی کریں

    لہجے کے بارے میں بات کریں اور اپنے بچوں کو یاد دلائیں کہ آن لائن کسی شخص کے مطلب کی غلط تشریح کرنا آسان ہے۔ نیک نیتی اختیار کرنے کیلئے ان کی حوصلہ افزائی کریں اور اگر انہیں کسی شخص کے مطلب کے بارے میں وضاحت نہیں ہے تو دوستوں سے براہ راست بات کریں۔ ان سے اس بارے میں بات کریں کہ آن لائن مثبت پیغامات بھیجنا اور موصول کرنا کتنا اچھا لگتا ہے۔ مثبت تبصرہ یا پیغام بھیجنے کیلئے ساتھ میں اپنی ایپس میں سے ایک کو استعمال کرنے پر غور کریں۔

Be Internet Brave شبہ ہونے پر، اس کے بارے میں بات کریں

ایک سبق جس کا اطلاق ڈیجیٹل قسم کے کسی بھی اور سبھی مواقع پر ہوتا ہے: جب آپ کے بچوں کا سامنا کسی قابل اعتراض چیز سے ہو تو کسی بھروسہ مند بالغ سے بات کرنے میں انہیں پریشانی نہیں ہونی چاہیے۔ آپ گھر میں کھلی بات چیت کو فروغ دے کر اس برتاؤ کو سپورٹ کر سکتے ہیں۔

  • وہ جو کچھ آن لائن کرتے ہیں اس کے بارے میں گفتگو کریں

    اس بارے میں بات کرنے کیلئے وقت صرف کریں کہ کیسے آپ کی فیملی ٹیکنالوجی کا استعمال کرتی ہے۔ ان ایپس میں دلچسپی دکھائیں جنہیں آپ کے بچے سب سے زیادہ استعمال کرتے ہیں اور ان کے ٹؤر کی درخواست کرتے ہیں۔ معلوم کریں کہ وہ کیسے اپنی ایپس استعمال کرتے ہیں اور وہ ان کے بارے میں کیا پسند کرتے ہیں۔

  • ایسی حدیں سیٹ کریں جو وقت کے ساتھ تبدیل ہو سکیں

    اپنے بچوں کے اکاؤنٹس کیلئے اصول سیٹ کریں، جیسے مواد کے فلٹرز اور وقت کی حدیں، اور اپنے بچوں کو یہ بتائیں کہ ان کے بڑے ہونے پر یہ تبدیل ہو سکتے ہیں۔ ترتیبات وقت کے ساتھ تبدیل ہونی چاہئیں۔ لہذا بس " اسے سیٹ کر کے بھول" نہ جائیں۔

  • ان لوگوں کی شناخت کرنے میں ان کی مدد کریں جن سے مدد لینی ہے

    اگر انہیں آن لائن ایسا مواد نظر آتا ہے جس سے انہیں پریشانی ہوتی ہے تو تین ایسے بھروسہ مند لوگوں کی شناخت کریں جن سے وہ رابطہ کر سکیں۔ بھروسہ مند شخص ان کی ملاحظہ کردہ چیز پر کارروائی کرنے اور آئندہ اس جیسی مزید چیزیں دیکھنے سے انہیں روکنے میں ان کی مدد کر سکتا ہے۔

  • آن لائن معیاری وقت کو سپورٹ کریں

    ان گیمز اور ایپس کے ساتھ مصروف ہونے کیلئے ان کی حوصلہ افزائی کریں جو انہیں تخلیقی صلاحیت یا مسئلہ حل کرنے کی مہارتیں سکھاتی ہیں۔

ہماری حفاظت کی کوششوں کے بارے میں مزید جانیں

آپ کی سیکیورٹی

ہم انڈسٹری کی سر فہرست سیکیورٹی کے ساتھ آپ کی آن لائن حفاظت کرتے ہیں۔

آپ کی رازداری

ہم سبھی کیلئے موزوں رازداری وضع کرتے ہیں۔

فیملیز کیلئے

ہم یہ نظم کرنے میں آپ کی مدد کرتے ہیں کہ آپ کی فیملی کیلئے آن لائن کیا درست ہے۔